بنوں نیوز(عمران علی)جماعت اسلامی پاکستان کے نائب امیر و سابق سینیٹر پروفیسر محمد ابراہیم خان نے کہاہے کہ جماعت اسلامی پاکستان ملعونہ آسیہ کی رہائی کی بھرپور مذمت کرتی ہے

بنوں نیوز(عمران علی)جماعت اسلامی پاکستان کے نائب امیر و سابق سینیٹر پروفیسر محمد ابراہیم خان نے کہاہے کہ جماعت اسلامی پاکستان ملعونہ آسیہ کی رہائی کی بھرپور مذمت کرتی ہے اور اس فیصلے کے خلاف بھر پور تحریک چلا ئے گی اس فیصلے سے ثابت ہوگیا ہے کہ عدالتوں میں انگریزوں کے قانون کی کتاب پڑی ہے اس لئے اسی طرح فیصلے ہوتے ہیں جب تک عدالت میں انگریز کی کتاب کی بجائے قرآن مجید پر فیصلے نہیں ہوتے اس وقت تک ملک کا نظام درست نہیں ہوگا ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے جماعت اسلامی کے ضلعی دفتر میں حلف برداری کی منعقدہ تقریب میں خطاب میں کیا جس میں جماعت اسلامی ضلع بنوں کے نئے امیر اجمل خان نے جماعت اسلامی پاکستان کے نائب امیر و سابق سینیٹر پروفیسر محمد ابراہیم خان کی موجودگی میں حلف اُٹھالیااس موقع پر جماعت اسلامی ضلع بنوں کے سابق ضلعی امیر ڈاکٹر ناصر خان،مطیع اللہ جان،مفتی صفت اللہ،حاجی جہانگیر خان،یوتھ کے سابق صدر ظہور خان،تحصیل نائب ناظم ڈاکٹر ریاض خان،مولانا تمیزالدین اور الخدمت فاونڈیشن کے ضلعی صدر محمد جلال شاہ ایڈووکیٹ بھی موجود تھے پروفیسر محمد ابراہیم کا کہنا تھا کہ مرکزی امیر سراج الحق نے سچ کہاتھا کہ ہمارے ملک میں انگریز کا قانون رائج ہے آج وہی بات سامنے آگئی سپریم کورٹ کے جج نے ایک واجب القتل اور گستاخ رسول خاتون ملعونہ آسیہ کو باعزت بری کردیا ہے جب ممتاز قادری کا معاملہ تھا تو اسلام اور پوری دنیا کے قانون میں پھانسی کی سزا نہیں تھی لیکن عدالت نے اُنہیں پھانسی پر لٹکا دیا تھا جج اللہ کے قانون سے بے خبر ہے جج وہ شخص ہوتا ہے جس کے پاس علم ہو لیکن آج کل علم کے ہوتے ہوئے لاعلمی کا مظاہرہ کرتے ہیں پورے ملک میں ملعونہ آسیہ مسیح کی رہائی کے خلاف احتجاجی مظاہرے ہورہے ہیں اور مزید خون ریزی کا اندیشہ ہے اُنہوں نے مطالبہ کیا کہ سپریم کورٹ ازخود نوٹس لے کر فیصلہ واپس لیں اُنہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی روز اول سے اسلامی نظام کے نفاذ کیلئے کوشاں ہے ملک میں ایک اسلامی نظام لانا چاہتی ہے ہماری پارٹی کے علاوہ تمام تر پارٹیاں وقتی اور لیمیٹڈ کمپنیاں ہیں ملک میں ایک واحد پارٹی ہے جو موروثی سیاست پر یقین نہیں رکھتی ہے وہ جماعت اسلامی ہے باقی سیاسی پارٹیوں میں موروثی سیاسی چلتی ہے ضلعی امیر اجمل خان نے تمام آنے والے مہمانوں کا شکریہ ادا کیا اور کہاکہ انشاء اللہ میں ا اپنی ذمہ داری خلوص نیت کے ساتھ ادا کروں گا کبھی بھی میں اراکین کے اعتماد کو ٹھیس نہیں پہنچاوں گا جماعت کا پیغام گھر گھر کو پہنچاوں گا اُنہوں نے کہاکہ میں اس عہدے کا لائق نہیں تھا اللہ تعالی کا شکریہ ادا کرتا ہوں کہ اس عہدے لائق بنایا میں اپنی ذمہ داری بانی اراکین کی رہنمائی سے نبھاوں گا آخر میں جماعت اسلامی ضلع بنوں کے نائب امیر اختر علی شاہ نے قرار ادا پیش کیا کہ گزشتہ روز کی گئی ملعونہ آسیہ میسح کی رہائی کی جماعت اسلامی اور پوری قوم مذمت کرتی ہے اور جماعت اسلامی ضلع بنوں حکومت سے مطالبہ کرتی ہے کہ کیا گیا فیصلہ واپس لیا جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں