بنوں نیوز(عمران علی)والدین کا احتجاج اور عوامی نیشنل پارٹی کے ڈسٹرکٹ کونسلر ملک شیروز خان کا احتجاج رنگ لایا ڈی ایچ او آفس میں رات کو ہی 150کے قریب ویکسین پہنچادی گئی

بنوں نیوز(عمران علی)والدین کا احتجاج اور عوامی نیشنل پارٹی کے ڈسٹرکٹ کونسلر ملک شیروز خان کا احتجاج رنگ لایا ڈی ایچ او آفس میں رات کو ہی 150کے قریب ویکسین پہنچادی گئی ای پی آئی کے ڈسٹرکٹ کوارڈینٹر اشرف یونس نے میڈیا کے نمائندوں کو ڈی ایچ او آفس ،میں بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ چونکہ والدین اپنے بچوں کو پیدائش کے فوری بعد بیماریوں سے بچاؤ کے ٹیکے نہیں لگاتے ہیں اس وجہ سے خسرہ،پولیو اور خناق کی وجہ سے انکے بچے متاثر ہوتے ہیں اور موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں محکمہ صحت کی جانب سے گاؤں گاؤں ٹیمیں بچوں کو بیماریوں سے بچانے کیلئے ویکسینشن کرانے جاتی ہیں لیکن والدین ان ٹیموں کے ساتھ تعاون نہیں کرتے ہیں اور ویکسین دینے سے انکار کرتے ہیں لیکن جب انکے بچے بیمار ہوجاتے ہیں اور آخری سانسیں لیتے ہیں تو وہ پھر لاکھوں روپے بھی خرچ کرنے کو تیار ہوتے ہیں اور احتجاج بھی کرتے ہیں لیکن اگر والدین پیدائش کے فوری بعد 15ماہ تک اپنے بچوں وک ہسپتالوں،ڈی ایچ او آفس یا مراکز صحت سے مفت ٹیکے لگوائیں اور محکمہ صحت کی ٹیموں کے ساتھ تعاون کریں تو خناق اور دیگر مہلک بیماریوں کو جڑ سے اکھاڑا جاسکتا ہے کیونکہ پوری دنیا میں خناق کی بیماری ختم ہے افغانستان اور پاکستان میں باقی ہے اور بنوں میں سب سے زیادہ کیسز سامنے آئے ہیں کیونکہ خناق کی دوائی رشیا میں تیار ہوتی ہے اور آرڈر دینے کے تین مہینوں بعد تیار ہوتی ہے اب بھی دو ہزار ویکسین کے آرڈر دیئے گئے ہیں اور تین مہینوں بعد ویکسین پہنچے گی اس موقع پر اے این پی کے ڈسٹرکٹ کونسلر ملک شیروز خان اور احسان اللہ خان نے والدین سے اپیل کی کہ وہ محکمہ صحت کی ٹیموں کے ساتھ تعاون کریں اور بچوں کی حفاظت کیلئے ڈی ایچ او آفس سے معلومات حاصل کریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں