وزیر اعظم نے سابقہ جی ٹی ایس ملازمین کے معاملے کا نوٹس لیکر دل خوش کردیئے،سابقہ جی ٹی ایس ملازمین

بنوں نیوز(عمران علی)23سال بعدملک کے کسی وزیر اعظم نے سابقہ گورنمنٹ ٹرانسپورٹ سروس ملازمین کی فریاد سنی اور ملازمین کے بقایاجات اور پنشن کے حوالے سے سیکرٹری ٹرانسپورٹ خیبر پختونخوا کو فوری طور پر معامہ حل کرنے کی ہدایت کی ہے جس پر سابقہ جی ٹی ایس ملازمین میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے اور ہزاروں ملازمین وزیر اعظم عمران خان کو تازیست دعائیں دیں گے ان خیالات کا اظہار جی ٹی ایس ملازمین کے سابقہ صوبائی صدر جنان خان،عنایت اللہ،عزیز الرحمن ،مشال،اسرار خان،سیف الرحمن،صاحب زار،یسین علی،نیک شیر دین،سدر ایوب ،نور جمال،محمد خان اور اکبر علی نے ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ 23سال قبل پیپلز پارٹی کی حکومت میں سابقہ وزیر اعلیٰ آفتاب احمد خان شیرپاؤ نے جی ٹی ایس سروس معطل کرکے ملازمین کو پنشن اور بقایاجات ادا کرنے یا کسی دوسرے محکمہ میں ایڈجسٹ کرنے کا وعدہ کیا لیکن اسکے بعد ہزاروں ملازمین کو بیروزگار کرکے نہ تو کسی دوسرے محکمہ میں ایڈجسٹ کیا اور نہ ہی پنشن اور بقایاجات دیئے جسکے بعد ہم نے اپنے حق کیلئے ہر حکومت میں احتجاج بھی کئے اور بذریعہ اخباری بنایانات اپنے حق کیلئے آواز بھی اٹھائی لیکن کسی بھی حکومت نے ہماری فریاد نہیں سنی اب موجودہ وزیر اعظم عمران خان نے ہمارے خط اور مطالبے پر محکمہ ٹرانسپورٹ خیبر پختونخوا کو معاملہ رولز اور پالیسی کے مطابق فوری حل کرنے کیلئے خط لکھا ہے جسکی کاپی ہمیں بھی بھجوائی ہے جس پر تمام سابقہ جی ٹی ایس ملازمین میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے اور امید پیدا ہوئی ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کی حکومت میں ہمیں 23سال بعد اپنا حق پنشن،بقایاجاتا ور مراعات کی شکل میں ملے گا اور اگر ہمیں ہمارا حق دیا گیا تو ہم زندگی بھر عمران خان کو دعائیں گے۔