ڈسٹرکٹ ہیڈ کواٹر ہسپتال میں ڈاکٹروں کی مبینہ غفت سے ایک اور بچی چل بسی

بنوں نیوز(عمران علی)ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال میں ڈاکٹروں کی مبینہ غفلت سے ایک آور بچی کی موت واقعہ ہو ئی پولیس حوالدار جہانزیب سکنہ خوجڑی بھنگی خان کی دو سالہ بچی کی زبان معمولی معمولی زخمی ہو ئی تھی ڈی ایچ کیو میں علاج کیلئے لائی جو اُن کے مطابق حد سے زیادہ نشہ دینے پر موت واقعہ ہوئی لواحقین نے ہسپتال میں ڈاکٹروں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اس موقع پر بچی کے والد جہانزیب خان نے میڈیا کو اپنی فریاد سناتے ہوئے بتایا کہ ہماری بچی مدینہ گل کو زبان پر چوٹ آ ئی تھی جو ہم نے اختیاطاً ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال لائی ہمیں کیا پتہ تھا کہ واپسی پر ہم اپنی گڑیا سی بچی کی لاش لے جائیں گے اُنہوں نے کہا کہ پہلے تو ڈاکٹروں نے ہماری بچی پر تجربات کئے اور بار بار کلونہ لگا کر اُنہیں زخمی کیا جبکہ موت واقعہ ہونے کے بعد ہم سے آپریشن کے دستخط لئے گئے جوکہ ہمیں دھوکے میں رکھا گیا جب دستخط لئے گئے تو توڑی دیر بعد اُن کی موت کی خبر سنائی دی پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے محکمہ صحت میں اصلاحات لانے کا وعدہ کیا تھا یہی ہے وہ اصلاحات جو ہفتے میں ضرور یہاں سے ڈاکٹروں کی غفلت کے باعث لواحقین کو ایک لاش لے جانی پڑتی ہے ہمیں اور بنوں کے غریب عوام کو انصاف فراہم کرکے ذمہ داروں کو معطل کیا جائے کیونکہ بار بار اس طرح کے واقعات رونما ہو رہے ہیں لیکن کوئی اقدام نہیں اُٹھایا جاتا ۔