ہاتھی خیل کے شاہ زیب،ولی الرحمن اور فرید اللہ جبکہ آمندی کے عزیز الرحمن،حبیب الرحمن اور فرزند علی کے مابین 4افراد کے قتل کی دشمنی دوستی میں تبدیل

بنوں نیوز(عمران علی)بنوچی ہاتھی خیل اور آمندی کے فریقین کے مابین چار افراد کے قتل اور دو افراد کے زخمی ہونے کی دشمنی دوستی میں تبدیل ہوگئی بنوچی ہاتھی خیل کے شاہ زیب،ولی الرحمن اور فرید اللہ کے خاندان نے مشران علاقہ کے ہمراہ پختون روایات کے مطابق آمندی کے عزیزالرحمن،حبیب الرحمن اور فرزند علی کے خاندانوں کے ہاں ننوتے جرگہ کیا اورفریقین نے قرآن پر صفائی دی کہ نہ تو ہم اس قتل میں ملوث ہیں اور نہ ہی معلومات ہیں نہ ہی ہماری مرضی پر قتل ہوئے ہیں جسکے بعد دونوں فریقین ایک دوسرے کے ساتھ بغلگیر ہوگئے اور دشمنی ختم کرکے آئندہ بھائیوں کی طرح رہنے کا عہد کیا صلح میں حاجی سلیم خان سابق ناظم آمندی،ملک شاہ،ملک صدیق اللہ آمندی اور سابق ناظم ہاتھی خیل مصر خان نے اہم کردار ادا کیا جرگہ میں سابق ڈسٹرکٹ کونسلر ملک عصمت اللہ خان،تاج علی خان ،یونین کونسل آمندی جے یو آئی کے امیر رضامحمد خان،پریس سیکرٹری دوست علی عرف علی سمیت کثیر تعداد میں مشران علاقہ نے شرکت کی ۔ واضح رہے کہ رمضان البارک کے دوران بنوچی ہاتھی خیل میں فائرنگ کے نتیجے میں خواتین تنازعہ پر خاتون سمیت آمندی قوم کے چار افراد قتل جبکہ دو زخمی ہوئے تھے ۔